کوئٹہ :موسلادھار بارش کے باعث شاہراہیں اور گلی کوچیں ،ندی نالیں اور تالاب بن گئے

صوبائی دارالحکومت کوئٹہ میں گرج چمک کے ساتھ موسلادھار بارش کے باعث شاہراہیں اور گلی کوچیں ،ندی نالیں اور تالاب بن گئے ۔عید کی خریداری میں مصروف گاہکوں ،دکانداروں اور شہریوں کو سڑک پر بہتے بدبودار پانی ،پلاسٹک اور دیگر کچروں کی بھرمار نے پریشانی میں مبتلا کردیابلکہ بہت سے شہریوں کے ساتھ عید کی خریداری کیلئے آئے ہوئے بچے بھی امتحان میں پڑ گئے ۔ہفتہ کی شام کو صوبائی دارالحکومت کوئٹہ میں گرج چمک کے ساتھ بارش کا اس وقت سلسلہ شروع ہوا جب شہر بھر میں عید کی خریداری عروج پر تھی ،موسلادھار بارش اور تیز ہواﺅں نے نہ صرف شہریوں کی عید کی خریداری کا مزہ کرکرا کردیا بلکہ بارش کے بعد سڑک پر بہنے والے سیلابی بدبودار پانی ،کیچڑ ،پلاسٹک اور دیگر کچروں نے بھی عوام کو خوب پریشان کیا بارش کے بعد کوئٹہ کی چھوٹی بڑی شاہراہیں اور گلی کوچیں ندی نالوں اور تالاب کامنظر پیش کرنے لگیں بہت سے لوگ خود کو بدبودار پانی کے ریلوں اور کچروں کی بھرمار سے بچانے کیلئے رکشوں کے ذریعے منزل مقصود تک گئے جب کہ اکثریت لوگ بغیر جوتوں کے ننگے پاﺅں گندے پانی میں چلتے دکھائی دئےے تیز بہتے پانی کے علاوہ فٹ پاتھوں پر لگے کھمبے بھی عوام کیلئے پریشانی کاباعث بنے رہے بلکہ شہر کے بعض علاقوں میں تیز بہتے پانی کے باعث ٹریفک کا نظام بھی شدید متاثر ہوا اور لوگ سڑ ک کے بیچوں بیچ پانی میں چلنے کے باعث ٹریفک جام دیکھنے کو ملا تیز اور موسلادھار بارش کے باعث میٹروپولٹین کارپوریشن کی شہر کو صاف کرنے کے دعو ﺅں کی بھی قلعی کھل گئی ۔محکمہ موسمیات نے پہلے ہی صوبے کے مختلف علاقوں میں گرج چمک کے ساتھ طوفانی بارش کی پیشنگوئی کی ہے بارش کے باعث شہر بھر میں عید کی خریداری پر بھی زبردست اثر پڑا اور چند گھنٹوں کیلئے مارکیٹوں میں گاہکوں کی تعداد کم ہوگئی تاہم رات کو ایک مرتبہ پھر لوگوں نے مارکیٹوں کا رخ کیا ۔

Related Articles

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *

Close
Close