غیر منتخب نمائندوں کے ذریعے ایک ارب روپے سے زائد کی ترقیاتی اسکیموں کے نام پر وسائل کی لوٹ مار کی گئی

0

- Advertisement -

بلوچستان نیشنل پارٹی ضلع کوئٹہ کے صدر و رکن بلوچستان اسمبلی میر احمد نواز بلوچ نے نیشنل پارٹی کوئٹہ کے صدر کی جانب سے سریاب میں ہونے والے ترقیاتی منصوبوں پر تنقید پر حیرت کا اظہار کرتے ہوئے کہا ہے کہ موصوف کی اپنی پارٹی کے دور حکومت میں غیر منتخب نمائندوں کے ذریعے ایک ارب روپے سے زائد کی ترقیاتی اسکیموں کے نام پر وسائل کی لوٹ مار کی گئی اور ایسی اسکیمیں مرتب کی گئی جن کا زمین پر کوئی وجود ہی نہیں اس ننگی کرپشن کے نتیجے میں روڑوں پر گشت کرنے والے منظور نظر افراد راتوں رات کروڑ پتی بن گئے نیب اور دیگر تحقیقاتی ادارے ایسے افراد کے خلاف غیر جانبدارانہ اور شفاف انکوائری کریں تو دودھ کا دودھ اور پانی کا پانی ہوجائے گا عوامی حقوق کے نام نہاد دعویداروں کی اصلیت آشکار ہو جائے گی بی این پی کوئٹہ کے ضلعی سیکرٹریٹ سے جاری بیان میں میر احمد نواز بلوچ نے کہا کہ بد قسمتی سے اس وقت بھی سریاب سمیت اپوزیشن کے مختلف حلقوں میں غیر منتخب نمائندوں کی مداخلت جاری ہے اور پی ایس ڈی پی کے تحت غیر منتخب نمائندوں کو نوازنے کی پالیسی جاری ہے تاہم اپوزیشن اراکین کو جو تھوڑے بہت وسائل فراہم کئے گئے ہیں ان کے تحت اجتماعی منصوبوں پر جامع حکمت عملی کے تحت کام جاری ہے اور معیار کا جائزہ لینے کے لیے سرکاری میکنزم کے علاوہ جماعتی سطح پر بھی چیک اینڈ بیلنس کا مضبوط نظام قائم ہے بعض مسترد عناصر بوکھلاہٹ کا شکار ہو کر زمینی حقائق سے نظریں چرا رہے ہیں اور غیر ضروری تنقید کے ذریعے سورج کو انگلی سے چھپانے کی کوشش کررہے ہیں تنقید کرنے والے  اس دہرے معیار اور دو چہروں کو عوام پہچان چکے ہیں بغل میں چھری اور منہ میں رام رام کرنے والے ان افراد کی اصلیت عوام پر آشکار ہو چکی ہے اور اب یہ نئی پیکنگ میں پرانا چورن بیچنے کی کوشش کررہے ہیں تاہم نظرئیے سے منحرف ہونے پر عوام میں  اب یہ اپنا اعتماد کھو بیٹھے ہیں اور بے بنیاد الزامات اور منفی تنقیدی ہتھکنڈوں کے ذریعے اپنی دکانداری چلانے کی ناکام کوشش کررہے ہیں جس میں انہی مزید ہزیمت کا سامنا کرنا پڑے گا انہوں نے کہا کہ عوام کی بہبود کے لیے خرچ ہونے والے وسائل کی ایک ایک پائی کا حساب دینے کو تیار ہیں ہماری ترقیاتی منصوبوں پر تنقید کرنے والوں کو بھی اخلاقی جرات کا مظاہرہ کرتے ہوئے  خود کو احتساب کے لیے پیش کرنا چاہیے تاکہ حقائق عوام کے سامنے آسکیں ،

Leave A Reply

Your email address will not be published.