بند اور غیر فعال سکولوں کی مکمل فعالی تک چین سے نہیں بیٹھیں گے، سیکرٹر ی تعلیم

0

- Advertisement -

 

 

سیکرٹری ثانوی تعلیم محمد طیّب لہڑی نے کہا ہے کہ تمام اضلاع کے ڈی ای اوز اپنے جائے تعیناتیوں پر اپنی حاضریاں یقینی بناتے ہوئے متعلقہ اضلاع میں تعلیمی ترقی کیلیے اپنا کردار ادا کریں۔بعض اضلاع میں افسران کی عدم موجودگی کی خبریں افسوسناک ہیں۔اضلاع میں غیر موجود افسران کیخلاف کارروائی عمل میں لائی جائے گی۔ تمام اضلاع میں تعلیمی اداروں میں جاری سکیموں کی بروقت تکمیل کو یقینی بناتے ہوئے ٹیک اوور چارج لیکر رپورٹ جمع کرائیں۔ ڈی ای او صاحبان پی ایس ڈی پی سکیموں کی تکمیل کی رپورٹ مکمل اطمینان اور سکولوں کے دورے کے بعد ہی متعلقہ تعمیراتی فرمز کو رسیدجا ری کر یں۔ نامکمل اور ادھورے منصوبوں کی تکمیل تک کسی بھی ادارے یا فرم کو جاری کردہ رسید کا زمہ دار متعلقہ ڈی ای اوز ہوں گے۔ ان خیالات کا اظہار انہوں نے ڈی ای اوز کانفرنس سے خطاب کرتے ہوئے کیا۔ سیکرٹری ثانوی تعلیم نے کہا کہ بند اور غیر فعال سکولوں کی مکمل فعالی تک چین سے نہیں بیٹھیں گے۔ تمام ڈی ای او صاحبان بند اور غیر فعال سکولوں کی مکمل تفصیل جمع کرائیں۔ ان کے خلاف محکمانہ کارروائی عمل میں لائی جائے گی۔ سیکرٹری تعلیم نے تمام ڈی ای اوز پر زور دیا کہ وہ اپنے متعلقہ اضلاع میں بوگس اور عیوضی اساتذہ کی نشاندہی کریں عیوضی اور بوگس اساتذہ کو کسی صورت برداشت نہیں کیا جائے گا۔ فرائض میں غفلت برتنے والوں کیلیے محکمے میں کوئی جگہ نہیں۔ محمد طیب لہڑی نے کہا کہ ریٹائرمنٹ کے کیسوں کو جلد از جلد نمٹانے کیلیے ٹھوس اور جامع حکمت عملی اختیار کی گئی اس سلسلے میں متعین کردہ فارمیٹ کیمطابق کیسوں کی تفصیلی رپورٹ ارسال کی جاسکتی ہے۔ انہوں نے تمام ڈویژنل ڈائریکٹر اور ڈی ای او صاحبان کو ہدایت کی کہ تعلیمی اداروں میں پینے کے صاف پانی کی فراہمی،واش رومز صحت و صفائی اور دیگر بنیادی سہولیات کی فراہمی کیلیے بنائے گئے پلان کے نفاذ کیلیے تمام وسائل بروئے کار لائے جائیں۔ فنڈز کے درست استعمال کو یقینی بنانے کیلیے ڈی ای اوز اپنا کردار ادا کریں۔ پروموشن کے کیسوں میں تیزی کیلیے اقدامات کیے جائیں۔ سکولوں کا BEMIS ریکارڈ فوری طور پر مکمل کی جائے اور رپورٹ جلد سے جلد ارسال کی جائے۔

Leave A Reply

Your email address will not be published.