کوئٹہ:قصائیوں نے پرائس کنٹرول کمیٹی کی قیمتوں کو ہوا میں ہوڑا دیا

صوبائی دارالحکومت کے اکثر علاقوں میں قصابوں نے پرائس کنٹرول کمیٹی کی جانب سے دیئے گئے قیمتوں کو ہوا میں ہوڑا دیا، قصابوں نے چھ دن کی ناکام ہڑتال کے بعد سرکاری نرخ پر گوشت فروخت کرنے کی حامی بھرنے کے بعد صوبائی حکومت کے نمائندے کے ساتھ مذاکرات کرنے کے بعد اپنی دوکانیں کھول دی ہیں مگر اس کے باوجود بھی قصائیوں نے نہ تو اس شریف آدمی کا خیال رکھا جس نے ان کو عزت دی اور ناکام ھڑتال کے باوجود ان کا بھرم رکھا جس کے بعد یہ اپنی دوکانیں کھولنے کے قابل ہوئے اور قصائیوں نے اپنے دوکانات کھولتے ہی کوئٹہ سمیت آس پاس کے علاقوں کے عوام کو ایک بار پھر لوٹنا شروع کردیا ہے قصائیوں کے ساتھ مذاکرات کرنے والے ذمہ داران اس بات کا فوری نوٹس لیں پورے کوئٹہ شہر میں میں بکرے کا گوشت فی کلو 900 روپے جبکہ گائے کا گوشت 550 روپے میں فروخت ہو رہا ھے اس مقدس ماہ میں عوام کے ساتھ ھونے والی زیادتی کا فوری نوٹس لیا جائے ضلعی انتظامیہ کو چاہیے کہ وہ ایسے ناجائز منافع خوروں کے خلاف فوری طور پر کارروائی کرے اہلیان کوئٹہ اور نواحی علاقوں کے عوام نے شہریوں سے اپیل کرتے ہوئے کہا ہے کہ گوشت خریدنے کا مکمل بائیکاٹ کیا جائے جب تک سرکاری نرخ پر گوشت فروخت نہیں کیا جاتا۔

Related Articles

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *

Close
Close