تمام فیصلے میرٹ پر ہوں گے۔ کسی کے ساتھ ناانصافی نہیں ہونے دیں گےصوبائی وزیر تعلیم سردار یار محمد رند

0

- Advertisement -

کوئٹہ 29جنوری:۔صوبائی وزیر تعلیم سردار یار محمد رند نے کہا ہے کہ تعلیمی ترقی اور مطلوبہ اہداف کے حصول کیلیے مربوط پالیسی لارہے ہیں۔ نظام تعلیم کی بہتری، محکمہ تعلیم کے انتظامی ڈھانچے میں اصلاحات کیلئے مربوط حکمت عملی وضع کی جارہی ہے۔ تمام فیصلے میرٹ پر ہوں گے۔ کسی کے ساتھ ناانصافی نہیں ہونے دیں گے۔ اقرباء پروری کی قطعاً اجازت نہیں دیں گے۔ ان خیالات کا اظہار انہوں نے محکمہ ثانوی تعلیم کے تعارفی اجلاس سے خطاب کرتے ہوئے کیا۔ سیکرٹری ثانوی تعلیم محمد طیّب لہڑی نے انہیں محکمے کے حوالے سے تفصیلی بریفنگ دی۔ اجلاس میں محکمے کے تنظیم اور آئندہ کے لائحہ عمل کے حوالے سے بات چیت کی گئی۔ صوبائی وزیر نے کہا کہ جاری اور نامکمل سکیموں کی بروقت تکمیل کو یقینی بنائی جائے۔ صوبے کے تمام تعلیمی اداروں میں یکساں تعلیمی سہولیات کی فراہمی کیلیے تمام وسائل بروئے کار لائی جائیں۔ محکمے کو روایتی کے بجائے جدید ویژن کے ساتھ چلانا چاہتے ہیں۔ اس موقع پر بی ای ایس کے پی ڈی غلام مصطفی نے انہیں منصوبے کے حوالے سے تفصیلات سے آگاہ کیا۔ سردار یار محمد رند نے کہا کہ عالمی اداروں کے تعاون سے چلنے والے تمام منصوبوں پر جاری کام کو مزید تیز کیا جائے۔ نصاب سازی اور نصاب کی رویو پر کام کو مؤثر انداز میں سرانجام دینے کیلیے مربوط حکمت عملی اپنائی جائے۔ اساتذہ کی تربیت اور استعداد کار میں اضافے کیلئے جامع منصوبہ بندی کی جائے گی۔ صوبائی وزیر نے کہا کہ صوبے میں تعلیمی ترقی کیلئے ماہر اور تربیت یافتہ تعلیمی ماہرین کی اشتراک و معاونت سے صوبے میں تعلیمی ترقی یقینی بنائیں گے۔ انہوں نے مزید کہا کہ باشعور معاشرے کے قیام کیلئے ضروری ہے کہ نئے نسل کو جدید تعلیم سے بہرور ہونا نہایت اہم ہے۔ سماجی تبدیلی کیلیے جدید نصاب وقت کی اہم ضرورت ہے۔ خواہش ہے کہ آنے والی نسلوں کیلئے ایک باشعور معاشرہ چھوڑ جائیں۔ اخلاص اوردیانت داری سے شعبہ تعلیم کی ترقی کیلئے کردار ادا کریں گے۔ تمام اسٹیک ہولڈرز کے مشاورت سے صوبے میں تعلیمی ترقی کا خواب شرمندہ تعبیر ہوگا۔ تدریسی اداروں میں بچوں اور بچیوں کے داخلوں اور انہیں سکولوں میں بہترین سہولیات کی فراہمی کیلیے تمام وسائل بروئے کار لائے جائیں گے۔

Leave A Reply

Your email address will not be published.